تاشقند: ’انیسویں صدی کے باکمال شاعروں میں مرزا غالب کا نام سب سے نمایاں‘

پروفیسر چندر شیکھر صاحب نے ازبکستان اور ہندوستان کے مابین رشتوں پر تفصیل سے روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ غالب پر ناز کرنے کا حق صرف ہندوستانی عوام کو ہی نہیں بلکہ ازبک عوام کو بھی حاصل ہے

تاشقند: ’انیسویں صدی کے باکمال شاعروں میں مرزا غالب کا نام سب سے نمایاں‘

نئی دہلی/ تاشقند: انیسویں صدی کے باکمال شاعر مرزا غالب پر ازبکستان کے شہر تاشقند کی ایک یونیورسٹی میں ایک پر وقار تقریب کا انعقاد ہوا۔ اس تقریب کے دوران پروفیسر چندر شیکھر اور محیا عبدالرحمانوا کی مشترکہ تصنیف 'منتخب غزلیات غالب' کی رسم اجرا ہوئی۔

اس موقع پر ہندوستانی سفیر منیش پربھات نے اپنی افتتاحی تقریر میں مہمانوں اور شرکاء کا استقبال کیا اور کہا کہ غالب ایک غیر معمولی صلاحیت کے تخلیق کار کی حیثیت سے نہ صرف ہندوستان بلکہ ساری دنیا کی تہذیب کا ایک حصہ بن گئے ہیں ان کی شہرت ان کی غزلوں میں انسانی جذبات اور سچے مشاہدات و تجربات کی خوبصورت پیش کش کے سبب ہے۔